Home » Gujranwala » حکومت نے نیٹو سپلائی بحال کرکے دہشتگردی کا دہانہ کھول دیا ہے،فضل کریم

حکومت نے نیٹو سپلائی بحال کرکے دہشتگردی کا دہانہ کھول دیا ہے،فضل کریم

گوجرانوالہ(محمد علی سجن)سنی اتحاد کونسل کے مرکزی چیئرمین صاحبزادہ فضل کریم ایم این اے کی ہدایت پر نیٹو سپلائی کی بحالی، توہین عدالت بل میں ترمیم، ڈرون حملوں اور دہشت گردی کے خلاف یوم احتجاج منایا گیا۔ تمام مساجد میں جمعۃ المبارک کے اجتماعات میں مذمتی قراردادیں منظور کرائی گئیں۔ بعد نماز جمعۃ المبارک مرکزی جامع مسجد نور میں احتجاجی جلسہ منعقد ہوا۔ جس میں حکومت کی اسلام، ملک اور عوام دشمن پالیسیوں کیخلاف زبردست نعرے بازی کی۔ اس موقع پر صوبائی سیکرٹری اطلاعات مرکزی جمعیت علماء پاکستان الحاج مولانا محمد اکبر نقشبندی، صاحبزادہ پیر محمد داؤد رضوی، مفتی محمد حسین صدیقی، مفتی غلام نبی جماعتی، الحاج سرفراز احمد تارڑ، پیر عمار سعید سلیمانی، قاری علام سرور حیدری، پیر محمد اشرف شاکر، مولانا عبدالمجید کیلانی، مولانا نصیر احمد نقشبندی، حافظ محمد یعقوب فریدی، قاری محمد حفیظ نقشبندی، حافظ محمد رفیق قادری، حافظ محمد سعید اور دیگر نے خطاب کیا۔ مولانا محمد اکبر نقشبندی نے کہا کہ نیٹو سپلائی کی بحالی اسلام و ملک دشمن قوتوں کیساتھ ہاتھ مضبوط کرنے اور اجتماعی خودکشی کے مترادف ہے۔ حکمرانوں نے اپنی عیاشیوں اور امریکی خواہشات کی تکمیل کیلئے ملکی سلامتی و خودمختاری داؤ پر لگا دی ہے۔ عوام حکمرانوں کے لگائے گئے زخموں کا حساب لیں گے۔ حکومت نے نیٹو سپلائی بحال کرکے دہشتگردی کا دہانہ کھول دیا ہے۔ ملک میں ریفرنڈم کراکے پوری قوم سے امریکی سپلائی لائن پر رائے لی جائے۔ انہوں نے کہاکہ لاہور میں دہشت گردی، انٹیلی جنس اداروں کی اور پولیس کی ناکامی ونااہلی ہے۔ انہوں نے کہا کہ توہین عدالت ترمیمی بل حکمرانوں اور اتحادیوں کے آمرانہ اقدامات کا تسلسل ہے۔ عدلیہ سے ٹکراؤ کی پالیسی پر گامزن رہنے سے خوفناک نتائج برآمد ہونگے۔