Home » News » فحش پروگرامات دکھانے والے چینلز کے خلاف سپریم کورٹ کا فیصلہ قابل تحسین ہے،جماعت اسلامی

فحش پروگرامات دکھانے والے چینلز کے خلاف سپریم کورٹ کا فیصلہ قابل تحسین ہے،جماعت اسلامی

  • Publish on August 8, 2012 in News
  • |
  • by admin

لاہور( این این آئی)امیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹر سید وسیم اختر،سیکرٹری جنرل نذیر احمد جنجوعہ،سیکرٹری اطلاعات پنجاب محمد فاروق چوہان اور ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات عمران الحق نے سابق امیر جماعت اسلامی قاضی حسین احمد کی طرف سے سپریم کورٹ میں رٹ پر عدالت عظمیٰ کی جانب سے پیمرا کو فحش پروگرامات دکھانے والے چینلوں کے خلاف کاروائی کے احکامات کوقابل تحسین قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ فحاشی پھیلانے والے تمام چینلز کی نشریات کی مکمل مانیٹرنگ کی جائے اورفحش اسٹیج ڈرامے،میوزیکل پروگرامات اور اشتہارات دکھانے پر متعلقہ چینلز کے لائسنس منسوخ کیے جائیں اور اسلامی اقدار کے منافی،غیر اخلاقی اور اخلاق سوز پروگرامات کو فی الفور بند کیا جائے۔الیکٹرانک میڈیا پاکستان کا نظریاتی اساس اور اسلامی شعائر کے خلاف پروگرامات نشر کرناافسوسناک اور قابل مذمت ہے۔انہوں نے کہاکہ عورت کو اشتہارات کے ذریعے ،کھلونا، بنا کر اس کی عزت و توقیرکو مسخ اور بنیادی ذمہ داریوں کے احساس سے راہ فرار اختیار کرتے ہوئے اسے اس کے اصل مقام سے ہٹانے کی سازش کی جارہی ہے۔انہوں نے کہاکہ اسلامی معاشرے میں عورت کو باعزت مقام حاصل ہے۔مغربی این جی اوز کے ذریعے بعض ٹی وی چینلز پاکستان کی اخلاقی و معاشرتی اقدار کو تباہ کرنے پر تلے ہوئے ہیں۔سپریم کورٹ آف پاکستان کو پاکستانی الیکٹرانک میڈیا میں ایسے چینلز کے خلاف جو ملکی و قومی مفاد کے خلاف پروگرامات نشر کررہے ہیںاور فحاشی کا کلچر عام کررہے ہیںسختی سے نمٹنے کے لئے ہدایات کرنی چاہئیں تاکہ میڈیاکوپاکستان کی نظریاتی اساس کے مطابق استوار کیاجاسکے۔انہوں نے کہاکہ نام نہاد این جی اوز ملک میں ہندووانہ اور مغربی ثقافت کو فروغ دے رہی ہیں۔چیف جسٹس آف سپریم کورٹ ایسی تمام این جی اوز جو غیر ملکی فنڈز پر چلتی ہیں اور دشمنوں کے ایجنڈے پر عمل پیراہیںکے خلاف بھی سخت ایکشن لیں۔