Home » Gujranwala » گوجرانوالہ کے کالم نگاروں کا ہنگامی اجلاس صدارت ابراہیم نفیس نے کی

گوجرانوالہ کے کالم نگاروں کا ہنگامی اجلاس صدارت ابراہیم نفیس نے کی

اجلاس میں ایڈیشنل جنرل سیکرٹری عمران کھوکھر اور سیکرٹری اطلاعات شاہد محمود گھمن کو ان کے عہدوں سے بغیر کسی نوٹس اور مشاورت سے فارغ کرنے پر احتجاج ریکارڈ کروایا گیا
گوجرانوالہ(سٹی رپورٹر)گوجرانوالہ کے کالم نگاروں کا ایک ہنگامی اجلاس زیر صدارت سابق جنرل سیکرٹری کالمسٹ فورم گو جرا نوالہ رانامحمد ابراہیم نفیس دین پلازہ میںمنعقد ہوا،جس میں گوجرانوالہ کے سینئر کالم نگاروں نے کثیر تعدادمیں شرکت کی۔اس اجلاس میں ایڈیشنل جنرل سیکرٹری عمران کھوکھر اور سیکرٹری اطلاعات شاہد محمود گھمن کو ان کے عہدوں سے بغیر کسی نوٹس اور مشاورت سے فارغ کرنے پر احتجاج ریکارڈ کروایا گیا۔ ممبران نے آئندہ کیلئے کالمسٹ فورم کی عبوری باڈی کیلئے چند تجاویز پیش کیں،جن میں اس بات کا اظہار کیا گیا کہ فورم میں غیر آئینی، غیرجمہوری اور آمرانہ رویہ اختیار کر کے کسی بھی عہدیدار کو فارغ کرنے کا کو ئی مجاز نہیں ہے۔گوجرانوالہ کالمسٹ فورم کالم نگاروں کی بقاء اور ان کو درپیش مسائل کے سدباب کیلئے ترتیب دیا گیا ہے،اگر کسی کالم نگار کو کوئی پریشانی یا مسئلہ پیش آتا ہے تو اس کا مطلب یہ نہیں کہ اسے اس کے عہدے سے فارغ کر دیا جائے بلکہ تمام ممبران اور عہدیداران سے مشاورت کے بعد حتمی فیصلہ دیا جانا چاہیے۔مقررین نے رائے دی کہ کالمسٹ فورم کی پالیسیوں اور ایجنڈے کو نقصان پہنچانے والے احباب کو چند دن کی مہلت دی جاتی ہے کہ وہ اپنا محاسبہ خود ہی کر لیں ورنہ سینئر کالم نگاروں کی مشاورت کے بعد نئی باڈی تشکیل دینے کا حتمی فیصلہ کیا جائیگا۔اس موقع پر رانا محمد ابراہیم نفیس،شاہد محمود گھمن،سلطان احمد گوجر،حکیم نسیم صادق،ہومیوڈاکٹر محمد بشیر شاہین،ایس ایم عرفان طاہر،میاں ارشد مظہر ایڈووکیٹ،فا رو ق عارف،رانا طاہر اقبال،مرزا محمد افضل بیگ ایڈووکیٹ،خواجہ محمد آفتاب عالم بٹ ایڈووکیٹ،میاں جاوید وٹو،فاروق احمد بٹ،شہباز احمد،حافظ محمد یعقوب آفریدی،ایم بی تبسم،حافظ محمد افتخار،شاہد محمود بٹ،حکیم جمیل عاصی اور دیگر نے شرکت کی جبکہ ٹیلی فون کے ذریعے اجلا س میں عمران اعظم رضا،ابرار احمد ظہیر،قاضی سعد اختر،فرزند علی شوق،عظیم گجر،رضوان حمید،عبدالطیف اپل،ڈاکٹر محمد الیاس بٹ،سیف علی عدیل و دیگر نے غیر آئینی اقدامات کی بھرپور انداز میں مذمت کی اور اجلاس میں شامل تمام کالم نگاروں کی مکمل تائید کی اور اپنے پورے تعاون کی یقین دہانی کرائی۔